View Translations English Urdu Indonesian

اسْتِقْراءٌ

English Induction
اردو استقراء، تلاش کرنا، جائزہ لینا
Indonesia Induktif

تَتَبُّعُ الجُزْئِياتِ أو أكْثَرِها لِيُحْكَمَ بِحُكْمِها على كُلِّيٍّ يَشْمَلُها.

English Examining particular instances, or majority of such instances, to apply their ruling to a general instance that includes them.
اردو کسی چیز کی تمام یا اکثر جزئیات کی تلاش اور تحقیق کرنا، تاکہ ان جزئیات کا حکم اس کلی پر لگایا جائے جو ان جزئیات کو شامل ہو۔
Indonesia Meneliti unsur-unsur sesuatu atau sebagian besarnya untuk menetapkan hukumnya secara global yang meliputi bagian-bagian tersebut.

الاِسْتِقْراءُ نوعٌ مِن أنواعِ الأَدِلَّةِ، وهو نَوْعانِ: 1- الاسْتِقْراءُ التَّامُّ، وهو: إثْباتُ الحُكْمِ في جُزئِيٍّ لثُبُوتِهِ في الكُلِّيِّ، مثال ذلك: كُلُّ صلاةٍ ذاتِ تحريمةٍ لا بُدَّ وأنْ تَكون مع الطَّهارَةِ؛ لأنّهُ اسْتُقْرِئَتْ كُلُّ الصَّلَواتِ - فَريضَةً كانت أو نافِلَةً - فَوُجِدَ أنّها لا تكونُ إلا مع الطَّهارَةِ. 2- الاِسْتِقْراءُ النّاقِصُ، وهو: تَتَبُّعُ أَكْثَرِ الجُزْئِيّاتِ لإثْباتِ الحُكْمِ الكُلِّيِّ الـمُشْتَرَكِ بين جَميعِ الجُزْئيّاتِ، مثال ذلك: الحكمُ بأنَّ أقلَّ الحيضِ يومٌ وليلةٌ باستقراءِ أحوالِ النساءِ.

English "Istiqraa" (induction) is a kind of proof, which is of two types: 1. Complete "istiqraa": establishing a ruling in a particular instance for its being established in a general instance. An example: purification is a must for the validity of prayer; this is because after the induction of all prayers, whether voluntary or obligatory, it was found that no prayer is valid except with purification. 2. Incomplete "istiqraa": examining the majority of particular instances to establish a general and common ruling that includes all such instances. An example: the minimum duration of menses is one day and one night; which has been determined by induction of the women cases.
اردو استقراء ایک طرح کى دلیل ہے، استقراء کی دو قسمیں ہیں: پہلی قسم: استقراءِ تام: اس کا مطلب یہ ہے کہ کسی جزوی مسئلہ میں اس حکم کو ثابت کیا جائے جو کلی مسئلہ میں موجود ہو (اور مذکورہ جزوی مسئلہ اس کلی مسئلہ کے تحت آتا ہو)، اس کی مثال یہ ہے کہ ہر طرح کی نماز کے لئے طہارت کا ہونا ضروری ہے۔ اس لیے کہ تمام نمازوں کا جائزہ لیا گیا خواہ فرض ہو یا نفل، تو ہر ایک میں طہارت کى شرط پائی گئی۔ دوسری قسم: استقراءِ ناقص: اس کا مفہوم یہ ہے کہ تمام جزئیات میں مشترک ایک کلی حکم ثابت کرنے کے لیے اکثر جزئیات کا جائزہ لیا جائے۔ اس کی مثال یہ ہے کہ حیض کی سب سے کم مدت ایک دن اور رات ہے اور یہ عورتوں کی حالتوں کے استقراء سے معلوم ہوا۔
Indonesia Al-Istiqrā` (induktif) adalah salah satu jenis dalil. Al-Istiqrā` (Induktif) ada dua macam: 1. Al-Istiqrā` at-Tām (induktif lengkap), yaitu menetapkan hukum pada bagian tertentu karena terbuktinya keberadaan hukum ini pada keseluruhannya. Contohnya, setiap salat harus disertai bersuci dari hadas, karena semua salat telah diteliti -baik wajib maupun sunah- lalu didapati semuanya tidak dilakukan kecuali disertai bersuci. 2. Al-Istiqrā` an-Nāqiṣ (induktif minor), yaitu meneliti sebagian besar bagian sesuatu untuk menetapkan hukum keseluruhan yang menjadi unsur persamaan di antara semua bagian tersebut. Contohnya, menetapkan hukum bahwa waktu minimal haid adalah satu hari satu malam dengan meneliti kondisi pada wanita.

التَّتَبُّعُ، يُقالُ: اسْتَقْرَأْتُ القَومَ، أيْ: تَتَبَّعْتُ كُلَّ فَرْدٍ مِنْ هؤلاءِ القَومِ؛ لِـمَعْرِفَةِ أحْوالِهِمْ وخَواصِّهِمْ، ويُطْلَقُ بِـمَعنى الجَمْعِ.

English "Istiqraa": surveying, following, investigating. Other meanings: collecting.
اردو استقراء: جائزہ لینا، ٹٹولنا، کہا جاتا ہے: ”اسْتَقْرَأْتُ القَومَ“ یعنی ’میں نے ان لوگوں کے احوال اور عادات جاننے کے لئے ان کے ہر فرد کو ٹٹولا‘۔ ’استقراء‘ کا اطلاق ’جمع کرنے‘ پر بھی ہوتا ہے۔
Indonesia Penelitian. Dikatakan, "Istaqra`tu al-qauma" yaitu aku meneliti setiap orang dari kaum itu untuk mengetahui keadaan dan hal-hal khusus pada mereka. Al-Istiqrā` juga diungkapkan dengan arti mengumpulkan.

يَرِد مُصْطَلَحُ (اِسْتِقْراء) في الفقه في مواضِعَ كثيرة، كما يَرِد في أُصول الفقهِ في بابِ: العُموم، وباب: الإِجْماع، وغَير ذلك.

التَّتَبُّعُ، مَأْخوذٌ مِنَ القرو، ومعناهُ: القَصْدُ والتَّتَبُّعُ، يُقالُ: اسْتَقْرَأْتُ القَومَ، أيْ: تَتَبَّعْتُ كُلَّ فَرْدٍ مِن هؤلاءِ القَومِ؛ لِـمَعْرِفَةِ أحْوالِهِمْ وخَواصِّهِمْ، ويُطْلَقُ بِـمَعنى الجَمْعِ، مَأْخوذٌ مِن القِراءَةِ، وهي: الضَّمُّ والجَمْعُ، يُقالُ: قَرَأْتُ الشَّيْءِ قُرْآناً، أيْ: ضَمَمْتُ بَعْضَهُ إلى بَعْضٍ. والجَمْعُ: اسْتِقْراءاتٌ.

قرو

الكليات : (ص 105) - الـمغني لابن قدامة : (7/461) - مجموع الفتاوى : (9/84) - الفائق في غريب الحديث والأثر : (3/185) - لسان العرب : (15/175) - تاج العروس : (39/290) - الموافقات : (2/12) - شرح الكوكب المنير : (2/426) - التعريفات للجرجاني : (ص 18) - معجم مقاليد العلوم في الحدود والرسوم : (ص 126) - كشاف اصطلاحات الفنون والعلوم : (1/172) - معجم مصطلحات أصول الفقه : (ص 60) - معجم لغة الفقهاء : (ص 64) - الشامل في حدود وتعريفات مصطلحات علم الأصول : (2/799) -