التصنيف: أخرى .

تارِيخٌ

English Date
اردو تاریخ
Indonesia Tanggal

الوَقْتُ الذي يُحَدِّدُ بِدايَةَ الشَّيْءِ ونِهايَتَهُ.

English The time that specifies the beginning of something and its end.
اردو وہ وقت جو چیز کی ابتدا اور انتہا کو متعین کرے۔
Indonesia Waktu yang menentukan permulaan sesuatu dan akhirnya.

التَّارِيخُ: هو المِيقاتُ الزَّمَنِيُّ لِلْحَوادِثِ، سَواءً كانت ماضِيَةً أو حاضِرَةً أو مُسْتَقْبَلِيَّةً، وهو وَسِيلَةٌ لِمَعْرِفَةِ كَثِيرٍ مِن الأَحْكامٍ الشَّرْعِيَّةِ، كتَوْرِيثٍ، وقِصاصٍ، وقَبُول رِوايَةٍ، وتَنْفِيذِ عَهْدٍ، وقَضاءِ دَيْنٍ، وما إلى ذلك، حيث يُعْرَفُ وَقْتُ كُلِّ شَيْءٍ مِن خِلالِ مَعْرِفَةِ السَّنَةِ، والشَّهْرِ، واليَوْمِ، أو بِأَحَدِها. والتَّأْرِيخُ: تَحْدِيدُ ابْتِداءِ زَمَنِ الوَقائِعِ مِن حَيْثُ التَّعْيِينُ والتَّوْقِيتُ؛ لِيُعْرَفَ بِها مِقْدارُ ما بين ذلك الابْتِداءِ وبين أيِّ وَقْتٍ آخَرَ، وهو قِسْمانِ: 1- تَأْرِيخٌ بِالسَّنَةِ الهِجْرِيَّةِ، وهو التَّأْرِيخُ بِالشُّهورِ الهِجْرِيَّةِ التي أَوَّلُها المُحَرَّمُ. 2- التَّأْرِيخُ بِالسَّنَةِ الشَّمْسِيَّةِ، وتَتَّفِقُ مع السَّنَةِ القَمَرِيَّةِ في عَدَدِ الشُّهُورِ، وتَخْتَلِفُ مَعَها في عَدَدِ الأَيّامِ، لأنَّ أيامَ السَّنَةِ الشَّمسيَّة محدَّدةٌ بينما السَّنَة القمريَّة دائرةٌ بين 29 و30 بحسب الرَّؤية.

English "Tāreekh" (date) is the time of occurrences taking place in the past, present, or future. It is a means for knowing many of the Shariah rulings like those pertaining to inheritance, retaliation, acceptance of a narration, enforcing an agreement, debt payment, etc. The time of everything is known by knowing the year, month, and day, or one of these three. "Tāreekh" is specifying the beginning of events by finding out their date to be able to calculate the time since they started and up until any other time. It is divided into two sections: 1. "Tāreekh" based on the Hijri calendar, using the Hijri months that start with Muharram. 2. "Tāreekh" based on the Gregorian calendar, and the solar year is equal to the lunar year in the number of months, but they differ in the number of days, because days of the solar year is fixed while days of lunar year is between 29 and 30 depending on the moon sight.
اردو تاریخ در اصل حوادث کے زمانی اوقات کو کہتے ہیں، خواہ ان حوادث کا تعلق ماضی سے ہو یا حال یا مستقبل سے۔ تاریخ بہت سے شرعی احکام کی معرفت کا ذریعہ ہے، جیسے وراثت کی حق داری، قصاص، روایت کی قبولیت، عہد کا نفاذ، قرض کی ادائیگی وغیرہ۔ کیوں کہ ہر چیز کا وقت سال، مہینے اور دن یا ان میں سے کسی ایک کی معرفت کے ذریعہ معلوم کیا جاتا ہے۔ تأریخ: تعیین وتوقیت کے اعتبار سے کسی حادثے یا واقعے کے زمانے کی ابتدا کی تحدید کرنے کو کہتے ہیں تاکہ اس کے آغاز واختتام کے مابین کا دورانیہ معلوم کیا جاسکے۔ تاریخ کی دو قسمیں ہیں: 1- ہجری سال کے مطابق تاریخ: اس سے مراد ہجری مہینوں کے حساب سے تاریخ ڈالنا ہے، جن میں سے پہلا مہینہ ’محرم‘ ہے۔ 2- شمسی سال کے مطابق تاریخ: یہ مہینوں کی تعداد میں ’قمری سال‘ کے موافق (برابر) ہوتی ہے، لیکن دِنوں کی تعداد میں اس سے مختلف ہوتی ہے، کیوں کہ شمسی سال (کے ماہ کے ایام) متعین ہے جبکہ قمری سال کے ماہ کے ایام چاند کی رؤیت کے اعتبار سے 29 اور 30 کے درمیان بدلتے رہتے ہیں۔
Indonesia At-Tārīkh adalah waktu peristiwa-peristiwa baik lampau, kini atau akan datang. At-Tārīkh merupakan media untuk mengetahui berbagai hukum syariat seperti pewarisan, kisas, penerimaan riwayat, pelaksanaan janji, pembayaran hutang dan lain sebagainya. Di mana waktu segala sesuatu dapat diketahui dengan mengetahui tahun, bulan, dan hari, atau salah satu di antara ketiganya. Sedang kata at-ta`rīkh -dengan huruf Hamzah- artinya menetapkan awal masa peristiwa dari sisi penetapan dan penentuan waktunya; agar bisa menjadi petunjuk untuk mengetahui jarak antara permulaan tersebut dengan waktu yang lain. At-Ta`rīkh (penanggalan) ada dua macam: 1. At-Ta`rīkh berdasarkan tahun Hijriah, yakni penanggalan berdasarkan bulan-bulan hijriah yang diawali dengan bulan Muharam. 2. At-Ta`rīkh berdasarkan tahun Syamsiah. Tahun Syamsiah sama dengan tahun Qamariah dalam jumlah bulan, namun berbeda dari jumlah harinya, karena hari-hari tahun Syamsiah sudah tertentu (diketahui) sementara (hari-hari) tahun Qamariah berkisar antara 29 dan 30 hari berdasarkan ru`yah (pengamatan kemunculan bulan).

التَّارِيخُ: وَقْتُ كُلِّ شَيْءٍ وزَمَنُهُ، والتَّأْرِيخُ: التَّوْقِيتُ، والتَّوْريخُ مِثْلُهُ، وتارِيخُ كُلِّ شَيْءٍ غايَتُهُ ووَقْتُهُ الذي يَنْتَهِي إليه.

English "Tāreekh": date, the time when something takes place.
اردو تاریخ: ہر چیز کا وقت اور اس کا زمانہ۔ التأریخ: کا مطلب ہے تعیینِ وقت، اور ’التَّوريخ‘ بھی اسی کے مثل ہے۔ ہر شے کی تاریخ اس شے کی غایت اور اس کا وہ وقت ہے جس پر اس کی انتہا ہوتی ہے۔
Indonesia At-Tārīkh artinya waktu dan masa segala sesuatu. At-Ta`rīkh berarti menetapkan waktu. At-taurīkh juga berarti seperti itu. Tārīkh segala sesuatu adalah ujungnya dan waktu berakhirnya.

يَرِد مُصْطلَحُ (تارِيخ) في الفِقْهِ في مَواضِعَ كَثِيرَةٍ، منها: كتاب الطَّهارَةِ، باب: المَسْح على الخُفَّيْنِ، وكتاب الصَّوْمِ، باب: صَوْم التَّطَوُّعِ، وكتاب الزَّكاةِ، باب: شُروط الزَّكاةِ، وكتاب النِّكاحِ، باب: الإِقْرار بِالنَّسَبِ، وغَيْر ذلك منِ الأبواب. ويرِد أيضاً في عِلمِ أصولِ الفِقْهِ، باب: النَّسْخ، وباب: تَعارُض الأَدِلَّةِ. ويُسْتَعْمَلُ التَّارِيخُ أو التَّأْرِيخُ - بِالهَمْزِ- بِمَعْنَى: تَسْجِيلُ ووَصْفُ وتَحْلِيلُ الأَحْداثِ التي جَرَت في الماضِي على أُسُسٍ عِلْمِيَّةٍ لِلْوُصولِ إلى حَقائِقَ وقَواعِدَ تُساعِدُ على فَهْمِ الوَقائِعِ. ويُطلَق في عِلم التّارِيخ، ويُراد به: الفَنُّ الذي يَبْحَثُ عن وَقائِعِ الزَّمانِ وأَحْداثِهِ، ومَوْضوعُهُ: الإِنْسانُ والزَّمانُ.

التَّارِيخُ: وَقْتُ كُلِّ شَيْءٍ وزَمَنُهُ، والتَّأْرِيخُ: التَّوْقِيتُ، والتَّوْريخُ مِثْلُهُ، يُقال: أَرَّخْتُ الكِتابَ لِيَوْمِ كَذَا ووَرَّخْتُهُ، أيْ: جَعَلْتُ لَهُ وقْتاً مُحَدَّداً، وتارِيخُ كُلِّ شَيْءٍ غايَتُهُ ووَقْتُهُ الذي يَنْتَهِي إليه، ومِنْهُ قِيل: فُلانٌ تَارِيخُ قَوْمِهِ، أيْ: إليْهِ انْتَهَى شَرَفُهُم. ويُقال: التَّارِيخُ والتَّأْرِيخُ اسمانِ لِمُسمّىً واحِدٍ.

أرخ

فتح الباري شرح صحيح البخاري : (7/268) - التعريفات للجرجاني : (ص 122) - تهذيب اللغة : (7/223) - المحكم والمحيط الأعظم : (5/238) - الصحاح : (1/418) - المغرب في ترتيب المعرب : (1/35) - التوقيف على مهمات التعاريف : (ص 89) - الكليات : (ص 820) - المصباح المنير : (1/11) - التوقيف على مهمات التعاريف : (ص 89) - مختار الصحاح : (ص 13) - لسان العرب : (3/4) - تاج العروس : (7/225) - التوقيف على مهمات التعاريف : (ص 155) - المطلع على ألفاظ المقنع : (ص 401) - كشاف اصطلاحات الفنون والعلوم : (1/365) - التعريفات الفقهية : (ص 50) -