صَلاةُ الجَماعَةِ

اردو نماز باجماعت
Indonesia Salat Jamaah

فِعْل الصَّلاةِ في جَماعَةٍ.

اردو نماز کو جماعت کے ساتھ ادا کرنا۔
Indonesia Melakukan salat secara berjamaah.

يحرصُ الإسلامُ على وِحدةِ المسلمينَ وتعاونِهم على الطَّاعاتِ؛ لذا شَرَعَ الله تعالى لنا عباداتٍ جماعيَّةً لا يقومُ بها المرءُ بمفردِه، كالنَّصحيةِ والأمرِ بالمعروفِ والنَّهيِ عن المنكرِ والحجِّ، ومن ذلكَ صلاةُ الجماعةِ للصَّلوات الخمسِ، وفيها فوائدُ كثيرةٌ، وجاءت أدلَّةٌ كثيرةٌ في وجوبِها عندَ عدمِ العذرِ.

اردو دینِ اسلام مسلمانوں کی وحدت واجتماعیت نیز نیکی اور طاعت کے کاموں میں باہمی تعاون کا حریص ہے اسی مقصد کے حصول کے لئے اللہ تعالی نے ہمارے لئے ایسی اجتماعی عبادات کو مشروع کیا ہے جنہیں ایک مسلمان اکیلے ادا نہیں کرتا، جیسے باہمی پند ونصیحت کرنا، آپس میں نیکی کا حکم دینا اور برائی سے روکنا، حج ادا کرنا اسی طرح پنجگانہ نمازوں کو جماعت کے ساتھ ادا کرنا ہے جس کے بہت سے فائدہ ہیں۔ نماز باجماعت کے وجوب کے سلسلہ میں بہت سے دلائل وارد ہوئے ہیں جبکہ کوئی عذر نہ پایا جاتا ہو۔
Indonesia Islam sangat perhatian dengan persatuan kaum Muslimin dan kerjasama mereka dalam ketaatan; oleh karena itu maka Allah -Ta'ālā- mensyariatkan ibadah-ibadah kolektif yang tidak dilakukan oleh seorang diri, seperti nasihat, amar makruf nahi mungkar, haji, dan termasuk juga salat berjamaan lima waktu, yang memiliki faidah yang sangat banyak. Terdapat banyak dalil yang mewajibkannya (secara berjamaah), kecuali ketika ada uzur.

يُطْلَقُ مُصْطَلَحُ (صَلاة الـجَماعَةِ) في الفِقْهِ: في كِتابِ الصَّلاةِ، باب: أَوْقات الصَّلَواتِ، وباب: صَلاةِ اللَّيْلِ، وباب: صَلاة الـجُمُعَةِ، وفي كِتابِ الاِعْتِكافِ، باب: شُروط الاِعْتِكافِ.

حاشية الدسوقي والشرح الكبير : 319/1 - بلغة السالك : 424/2 - منح الجليل شرح مختصر خليل : 211/1 - معجم لغة الفقهاء : 275 - الموسوعة الفقهية الكويتية : 165/27 -