تَعْزِيرٌ

اردو تعزیر، ایسی سزا جو شرعا مقرر نہ ہو
Indonesia Sanksi

عُقُوبَةٌ غَيْرُ مُقَدَّرَةٍ شَرْعاً في كُلِّ مَعْصِيَةٍ ليس فيها حَدٌّ ولا كَفّارَةٌ غالِباً.

اردو ہر اس معصیت پر دی جانے والی شرعا غیر مقرر سزا جس میں عام طور پر حد اور کفارہ نہیں ہوتا۔
Indonesia Hukuman yang tidak memiliki ketentuan baku dalam syariat untuk setiap perbuatan maksiat yang umumnya tidak mempunyai ḥad (hukuman tertentu) dan kafarat.

التَّعْزِيرُ: هو الضَّرْبُ على وَجْهِ التَّأْدِيبِ، وهي عُقُوبَةٌ غَيْرُ مُقَدَّرَةٍ شَرْعاً، وتَخْتَلِفُ بِاخْتِلافِ الجِنايَةِ وأحْوالِ النّاسِ، وسُمِّيَتْ العُقُوبَةُ تَعْزِيراً؛ لأنّها تَدْفَعُ الجانيِ وتَمْنَعُهُ عن ارْتِكابِ الجَرائِمِ والمَعاصِي، ولأنّ مِن مَقاصِدِها: إِصْلاحهُ وتَـهْذِيبهُ.

اردو تعزیر: بغرضِ تادیب مارنا۔ یہ ایک ایسی سزا ہوتی ہے جو شرعی طور پر مقرر نہیں ہوتی اور جرم کی نوعیت اور مختلف لوگوں کے اعتبار سے بدلتی رہتی ہے۔ سزا کو تعزیر کا نام اس لئے دیا گیا ہے کیونکہ یہ مجرم کو جرائم اور معاصی کے ارتکاب سے روکتی اور منع کرتی ہے اور اس کا مقصد مجرم کی اصلاح وتہذیب ہوتا ہے۔
Indonesia At-Ta'zīr ialah pemberian sanksi sebagai pemberian pelajaran. Yaitu hukuman yang jenisnya tidak ditentukan oleh syariat dan berbeda-beda sesuai dengan jenis tindak kriminal dan kondisi pelakunya. Hukuman ini disebut dengan Ta'zīr; karena mampu menghalau dan mencegah pelaku kriminal untuk tidak melakukan kejahatan dan maksiat. Juga karena di antara tujuannya ialah memperbaiki dan mendidiknya.

التَّعْزِيرُ: مأخوذٌ ِمنَ العَزْرِ، وأصْلُهُ: الـمَنْعُ والرَّدُّ.

اردو تعزیر: یہ عَزَر سے ماخوذ ہے۔ اس کا حقیقی معنی ہے: منع کرنا اور لوٹانا۔
Indonesia At-Ta'zīr diambil dari kata al-'azr. Makna asalnya adalah melarang dan menolak.

التَّعْزِيرُ: على وَزنِ تَفْعِيل، مأخوذٌ منَ العَزْرِ، وأصْلُ العَزْرِ: الـمَنْعُ والرَّدُّ، يُقالُ: عَزَّرْتُهُ وعَزَرْتُهُ -بِالتَّخْفِيفِ-، أيْ: مَنَعْتُهُ. ويأْتي التَّعْزِير بِمعنى: النُّصْرَة؛ لأنّ في النُّصْرَةِ رَدَّ الأعْداءِ ومَنْعَهُم مِن الأذَى، ويُطْلَقُ أيضاً على التَّأْدِيبِ والمُعاقَبَةِ؛ لأنّهُ يَمْنَعُ الجانِي مِن الجَرِيمَةِ. ومِن مَعانِيهِ: الإِعانَةُ والتَّوْقِيرُ والتَّوْقِيفُ.

عزر

المحكم والمحيط الأعظم : (1/516) - المفردات في غريب القرآن : (ص 333) - مشارق الأنوار : (2/80) - مختار الصحاح : (ص 207) - لسان العرب : (4/561) - المصباح المنير في غريب الشرح الكبير : (2/407) - المغرب في ترتيب المعرب : (2/59) - المطلع على ألفاظ المقنع : (ص 374) - طلبة الطلبة في الاصطلاحات الفقهية : (ص 123) - الكليات : (ص 483) - كشاف اصطلاحات الفنون والعلوم : (1/485) - دستور العلماء : (1/221) - معجم لغة الفقهاء : (ص 136) - القاموس الفقهي : (ص 250) - معجم المصطلحات والألفاظ الفقهية : (1/471) -