بُيوعٌ مَنْهِيٌّ عنها

English Prohibited sale transactions
اردو منہی عنہا بیوع، ممنوعہ بیع
Indonesia Jual beli terlarang

البُيوعُ المَمْنوعَةُ في الشَّرْعِ.

English Prohibited sale transactions by the Shariah.
اردو وہ بیع جو ازروئے شریعت ممنوع ہیں۔
Indonesia Jua beli yang dilarang oleh syariat.

البُيوعُ المَنْهِيُّ عنها: هي بُيوعٌ وردَ تحريمُها في اكتابِ والسُّنَّةِ أو أحدهما، وهذه البُيوع مِنها ما يكون المانِعُ فيها لِحَقِّ اللهِ سبحانَه وتَعالى، كالبَيعِ بعد نِداء الجُمَعَةِ الثّاني، ومِنها ما يكون المانِع فيها لِحَقِّ الآدَمِيِّ، كالبَيْعِ على بَيْعِ أخِيه، وتَلَقِّي الجَلَبِ، ومِنها ما يكون المانِع فيه لِحَقِّ الله سبحانه وتعالى ولِحَقِّ الآدَمِيِّ، كالبُيوعِ المُشتَمِلَةِ على الرِّبا، مع أنه قد يكونُ بعضُها مشتملًا على شُروط البَيْعِ الصَّحِيح، لكنَّ لا بد للصحة من أن تَتوفَّر الشُّروط وتَنتَفِي المَوانِعُ، والأصلُ في البُيوع والمُعامَلاتِ التِّجاريَّة الجَوازُ والإباحَة، فإذا اشتَمَلَت المُعاملَةُ على رِبا، أو غَرَرٍ، أو ظُلْمٍ، أو أكلٍ لأموالِ النّاسِ بِالباطِل حَرُمَت، وكذا إذا نَقَص شَرْطٌ أو أكثر مِن شُروطِ البَيْعِ الصَّحِيح وغيرِهِ من العقودِ.

English "Buyoo‘ manhiyy ‘anhā" (prohibited sale transactions) are sale transactions that meet the conditions of the valid sale in general. However, a sale is not valid unless its conditions are met and its impediments are missed. The impediment in these sale transactions could be pertaining to a right of Allah, the Almighty, like a sale made after the second call to the Jum‘ah prayer; or it could be pertaining to a right of a person, like selling something that has already been sold to someone else or going out to meet the riders in a trade caravan; or it could be pertaining to a right of Allah, the Almighty, and a right of a person as well, like the sale transactions that involve usury. Although it may be that the sale meets the conditions of a valid sale, but for the sale to be valid the conditions must be met and impediments missed. The basic rule of the sale and commercial transactions is permissibility. So if a transaction includes usury, ambiguity, oppression, or taking people's property unlawfully, it is considered forbidden. The same ruling applies of one or more of the conditions of a valid sale is missed.
اردو ’منہی عنہا بیوع‘ سے مراد وہ بیوع ہیں جن کی حرمت کتاب وسنت یا دونوں میں سے کسی ایک میں آئی ہو۔ ان بیوع میں سے کچھ ایسی ہیں جن میں مانع کا تعلق اللہ تعالی کے حق سے ہے، جیسے جمعہ کے دن دوسری اذان کے بعد خرید وفروخت کرنا۔ بعینہ کچھ بیوع ایسی ہیں جن میں مانع کا تعلق انسان کے حق سے ہے، جیسے کسی دوسرے کی بیع پر بیع کرنا ، اور آگے جاکر باہر سے مال لانے والوں سے مل کر بیع کرنا، اسی طرح کچھ موانع ایسے ہیں جن کا تعلق اللہ سبحانہ و تعالی اور بندوں دونوں کے حقوق سے ہے، جیسے سود پر مشتمل خرید و فروخت۔ گرچہ ان میں سے بعض بیوع میں صحیح بیع کی شروط پائی جائیں تاہم ان بیوع کے صحیح ہونے کے لیے تمام شروط کا پیا جانا اور موانع کا ختم ہوجانا ضروری ہے۔ بیوع اور تجارتی معاملات میں اصل جواز اور اباحت ہے، لیکن جب ان میں سود یا دھوکہ یا ظلم یا لوگوں کا مال باطل طریقوں سے کھانا پایا جائے تو یہ حرام ہوجاتی ہیں، اسی طرح جب صحیح بیع اور صحیح عقد کی شروط میں سے کوئی شرط یا ایک سے زائد شروط مفقود ہوں تب بھی یہ حرام ہوجاتی ہیں۔
Indonesia Jual beli terlarang ialah jual beli yang diharamkan dalam Al-Qur`ān dan Sunah atau salah satunya. Jual beli seperti ini ada yang penghalangnya berkaitan dengan hak Allah Subḥānahu wa Ta'ālā, seperti jual beli setelah azan Jumat yang kedua. Ada juga yang penghalangnya berkaitan dengan hak manusia, seperti jual beli sesuatu yang sedang dibeli (ditawar) oleh orang lain, dan menyongsong orang desa yang membawa barang ke kota. Ada juga yang penghalangnya berkaitan dengan hak Allah Subḥānahu wa Ta'ālā dan hak manusia, seperti jual beli yang mengandung riba, meskipun sebagian jual beli tersebut memenuhi syarat-syarat jual beli yang sah, tetapi keabsahan tersebut harus memenuhi persyaratan dan tidak ada yang menafikannya (menghalanginya). Hukum asal dalam jual beli dan bisnis adalah boleh. Namun, apabila transaksinya mengandung riba, garar (tipuan), kezaliman, atau memakan harta orang lain dengan batil maka hukumnya menjadi haram. Demikian juga apabila tidak terpenuhi salah satu syarat atau lebih dari syarat-syarat jual beli yang sah, dan akad-akad lainnya.

يَرِد مُصْطلَح (بَيْع مَنْهِيّ عَنْهُ) في الفقه في كتاب البُيوعِ، باب: شُروط البَيْعِ، وباب: أَسْباب الفَسادِ في البَيْعِ، وفي باب: الرِّبا، وغَيْر ذلك من الأبواب.

التاج والإكليل لمختصر خليل : (6/254) - إرشاد السالك إلى أشرف المسالك : (1/78) - روضة الطالبين : (3/395) - الـمغني لابن قدامة : (4/297) - الموسوعة الفقهية الكويتية : (9/143) - المعاملات المالية أصالة ومعاصرة : (3/357) -