بَخِيلَةٌ

English A specific case of inheritance where total shares become 27 instead of 24
اردو بَخِيلَۃ (علمِ میراث کا ایک مسئلہ)
Indonesia Bakhīlah

لَقبٌ للـمَسْأَلَةِ الفَرَضِيَةِ الَّتي يَتَحَوَّلُ فِيها أَصْلُ الـمَسْأَلَةِ مِنْ أَرْبَعٍ وَعِشْرِينَ إلى سَبْعٍ وعِشْرِينَ.

English A specific case of division of inheritance where the total shares become 27 instead of 24.
اردو میراث کے ایک مسئلہ کا نام جس ميں مسئلہ کی اصل چوبیس سے ستائیس میں تبدیل ہوجاتی ہے۔
Indonesia Sebuah istilah untuk kasus dalam ilmu Faraid (pembagian warisan) di mana bilangan pokoknya berubah dari 24 menjadi 27.

البَخِيلَةُ: مسألَةٌ مِنْ مَسائِلِ العَوْلِ في المِيراثِ، سُمِّيَتْ بذلك؛ لأنّها أقَلُّ الأُصولِ عَوْلاً، وتُسَمَّى أيضاً الـمِنْبَرِيَةُ؛ لأنّ علِيًّا رضي اللهُ عنه سُئِلَ عنها على الـمِنْبَرِ، وهي مِن سِهامِ الفَرائِضِ التي تَعولُ، والعَوْلُ: زِيادَةٌ في السِّهامِ ونَقْصٌ في الأنْصِباءِ، أو يُقالُ: زِيادَةُ فُروضِ الـمَسْألَةِ على أَصْلِها.

English "Bakheelah" (a specific case of inheritance where total shares become 27 instead of 24) is one of the cases of "‘awl" (increment of base number) in determining the shares of inheritance. It is called as such because it is the case where the total shares undergo the least amount of "‘awl". It is also called "minbariyyah" because ‘Ali, may Allah be pleased with him, was asked about it while he was on the "minbar" (pulpit). "‘Awl" means an increase of the total number of shares and decrease in the amount every heir receives from the inheritance. It could also be defined as a situation in which the actual number of shares exceed the original number (after changing the base number to the lowest common denominator when adding the share fractions).
اردو ’بخیلۃ‘ كا تعلق علمِ ميراث ميں عول كے مسائل کے ساتھ ہے اور اسے یہ نام اس لیے دیا گیا ہے کیوں کہ عول کے اعتبار سے یہ سب سے کم ترین اصل ہے۔ اسے ’مِنْبَرِیّہ‘ بھی کہا جاتا ہے کیوں کہ علی رضی اللہ عنہ سے اس کے بارے میں اس وقت پوچھا گیا تھا جب وہ منبر پر تھے۔ یہ فرائض کے ان حصوں میں سے ہے جن میں ’عَوْل‘ واقع ہوتا ہے، عَول کا مطلب ہے (اصحاب الفرائض کے) حصوں میں زیادتی اور اصل مسئلہ میں کمی، یا یہ کہ اصحاب الفرائض کے حصوں کا اصل مسئلہ سے زائد ہو جانا۔
Indonesia Al-Bakhīlah adalah salah satu dari kasus al-'aul dalam pembagian warisan. Dinamakan demikian; karena kasus ini merupakan bilangan pokok terkecil yang mengalami 'aul. Disebut pula al-Minbariyyah; karena Ali -raḍiyallāhu 'anhu- pernah ditanya mengenai kasus ini saat berada di atas mimbar. Al-Bakhīlah termasuk bagian-bagian faraid yang mengalami 'aul. Al-'Aul adalah bagian lebih banyak dari pada porsi. Atau dengan kata lain: jumlah bagian ahli waris lebih banyak dari jumlah pokoknya.

البَخِيلَةُ: أُنْثَى البَـخِيلِ، وهو الذِي يَـمْنَعُ المالَ ويُـمْسِكُهُ عَمَّنْ يَسْتَحِقُّهُ، والبُخْلُ: الإِمْساكُ عن العَطاءِ، والـمَنْعُ مِن الصَّدَقَةِ.

English "Bakheelah": feminine form of "bakheel": a miser who is unwilling to spend money and withholds it from those who deserve it.
اردو بَخِيلَۃ: یہ ’بخیل‘ کی مؤنث ہے اور ’بخیل‘ اس شخص کو کہا جاتا ہے جو اپنا مال نہیں دیتا اور حق دار سے اسے روک کر رکھتا ہے۔ ’بُخل‘ کہتے ہیں دینے اور صدقہ کرنے سے رک جانا۔
Indonesia Bentuk muannaṡ dari al-bakhīl, yaitu orang yang menahan harta dan mencegahnya dari orang yang berhak mendapatkannya. Al-Bukhl adalah Tidak memberi dan melarang bersedekah.

البَخِيلَةُ: أُنْثَى البَـخِيلِ، وهو الذِي يَـمْنَعُ المالَ ويُـمْسِكُهُ عَمَّنْ يَسْتَحِقُّهُ، يُقالُ: بَـخِلَ، يَبْخَلُ، بُـخْلاً، فهو بَخِيلٌ، وهي بَخِيلَةٌ، والبُخْلُ: الإِمْساكُ عن العَطاءِ، والـمَنْعُ مِن الصَّدَقَةِ، وضِدُّه: الكَرَم والـجُود.

بـخل

المحكم والمحيط الأعظم : 210/5 - الكليات : 361 - لسان العرب : 47/11 - مختار الصحاح : 73 - المصباح المنير في غريب الشرح الكبير : 37/1 - التعريفات : (ص 43) - العذب الفائض : (ص 170) - إعانة الطالبين على حل ألفاظ فتح المعين : (3/243) - الموسوعة الفقهية الكويتية : (8/20) -