أَعْلامُ الحَرَمِ

English Haram signposts
اردو حدودِ حرم کے اشارات/علامات۔
Indonesia Tanda-tanda batas tanah haram

العَلاماتُ الـمَنْصُوبَةُ في أَماكِنَ مُعَيَّنَةٍ شَرْعاً لِبَيانِ حُدُودِ الحَرَمِ المكيِّ والمدنيِّ.

English The signs erected in certain places specified by the Shariah to mark the boundaries of the Sacred Mosque in Makkah and in Madinah.
اردو وہ اشارات (علامات) جو حرمِ مکی اور حرمِ مدنی کی شرعی حدود بتانے کے لئے مخصوص اماکن میں نصب کیے گئے ہیں۔
Indonesia Tanda-tanda yang ditancapkan di tempat-tempat yang telah ditentukan secara syar'i untuk memberitahukan batas-batas wilayah tanah haram Makah dan Madinah.

أَعْلامُ الـحَرَمِ: هي العَلاماتُ الـمَبْنِيَّةُ على حُدودِ الحَرَمِ. ويُذْكَرُ أنّ أوّلَ مَن بَناها إِبْراهِيْمُ صَلَواتُ اللهِ وسَلامُه عليه، وأشارَ له جِبريل إلى مَواضِعها، ثمّ أَمَرَ النَّبِيُّ صلَّى اللهُ عليه وسَلَّمَ بِتَجْدِيدِ تلك العَلاماتِ التي عَمِلَها إِبْراهِيمُ؛ ثم عمر؛ ثم عثمان؛ ثم معاويةُ رضي الله عنهم، ثم مَن جاءَ بَعْدَهُم. وهذه العَلاماتُ بَيِّنةٌ إلى الآن -بِحَمْدِ اللهِ- مَكْتوبٌ علَيْها بِاللُّغةِ العَرَبِيَّةِ وغَيْرِها: بِداية حدّ الحَرَمِ، ونِهايَة حَدّ الحَرَمِ في مكة وكذلك المدينة.

English "A‘lām al-Haram" (Haram signposts) are the signposts constructed at the boundaries of the Sacred Mosque in Makkah as well as in Madinah. The first to erect them was Prophet Ibrāhim (Abraham), peace be upon him, after being told by Archangel Jibreel (Gabriel) where to place them. The Messenger of Allah, may Allah’s peace and blessings be upon him, then ordered his Companions to renovate these signs that Ibrāhim had built. ‘Umar, ‘Uthmān, and then Mu‘āwiyah, may Allah be pleased with them, did the same, as well as other Caliphs who came after them. These signs are still clear until this day - praise be to Allah - written in Arabic as well as in other languages, indicating the start and end of sacred precincts in Makkah and Madinah.
اردو اعلام الحرم: وہ اشارات جو حدودِ حرم پر لگائے گیے ہیں۔ بیان کیا جاتا ہے کہ سب سے پہلے ابراہیم علیہ السلام نے جبرائیل علیہ السلام کی نشاندہی پر ان اعلام کو نصب کیا، پھر نبیﷺ نے ان نشانات کی تجدید کا حکم دیا جن کی بنیاد ابراہیم علیہ السلام نے رکھی تھی۔ بعد ازاں عمر، عثمان اور معاویہ رضی اللہ عنہم اور ان کے بعد میں آنے والوں نے ان کو اسی طرح برقرار رکھا۔ یہ علامات اللہ کے فضل سے ابھی تک برقرار ہیں۔ مکہ اور مدینہ میں ان پر عربی اور دیگر زبانوں میں یہ لکھا ہوا ہے: حدودِ حرم کی ابتداء یہاں سے ہوتی ہے، حدود حرم یہاں پر ختم ہیں۔
Indonesia A'lām al-Harām adalah tanda-tanda yang dibangun di perbatasan Tanah Haram. Disebutkan bahwa orang yang pertama kali membangun tanda-tanda itu adalah Ibrahim -'alaihi as-salām-, dan Jibrillah yang menunjukkan tempat-tempat tanda tersebut kepadanya. Selanjutnya Rasulullah -ṣallallāhu ‘alaihi wa sallam- memerintahkan untuk memperbaharui tanda-tanda yang telah dibangun oleh Ibrahim. Kemudian (dilanjutkan) oleh Umar lalu Usman, lalu Mu'awiyah -raḍiyallāhu 'anhum- dan para khalifah setelah mereka. Alḥamdulillāh, tanda-tanda ini masih terlihat jelas sampai sekarang dengan di atasnya terdapat tulisan berbahasa Arab dan juga bahasa lainnya yang bertuliskan: "Awal batas wilayah Haram, dan akhir batas wilayah Haram" di Makah dan juga di Madinah.

مسالك الأبصار في ممالك الأمصار : (ص 33) - البيان والتحصيل : (17/307) - شفاء الغرام بأخبار البلد الحرام : (ص 54) - نظم الدرر في تناسب الآيات والسور : (20/240) - الموسوعة الفقهية الكويتية : (5/258) - معجم المصطلحات والألفاظ الفقهية : (1/237) -